سینکڑوں سال پرانی دنیا کی تاریخ کی شرمناک ترین کتاب مل گئی، اس میں کیا ہے؟ جان کر ہی انسان کے گال لال ہوجائیں

شاید آپ بھی یہی سمجھتے ہوں گے کہ آج کے دور میں فحاشی و عریانی کی وباءکچھ زیادہ عام ہو گئی ہے، اور غالباً پرانے وقت میں حالات ایسے نہیں تھے۔ بظاہر تو ایسا ہی لگتا ہے لیکن اڑھائی سو سال پرانی ایک کتاب کی دریافت نے فحاشی و عریانی کے متعلق تاریخ دانوں کے خیالات بھی بدل دئیے ہیں۔دی مرر کے مطابق برطانیہ میں ایک ایسی قدیم کتاب کی دریافت ہوئے ہے جسے بے حیائی کا خزانہ قرار دیا جا سکتا ہے۔

ماہرین نے اندازہ قائم کیا ہے کہ یہ کتاب شائع ہوتے ہیں پابندی کی زد میں آ گئی ہو گی اور شاید یہی وجہ ہے کہ سینکڑوں سال تک اس کا کہیں ذکر تک نہیں ملتا۔ اس کتاب میں ناصرف انتہائی غیر مناسب اور خطرناک جنسی افعال کے بارے میں بات کی گئی ہے بلکہ جانوروں کے ساتھ جنسی فعل کا تذکرہ بھی ملتا ہے۔کتاب کا عنوان ”ارسطو کا شاہکار“ ہے اور اسے دو حصوں میں شائع کیاگیا تھا۔ اب اس کتاب کو نیلامی کیلئے پیش کیا جا رہا ہے اور توقع کی جا رہی ہے کہ اگلے ماہ ڈربی شائر کے ایک بڑے نیلام گھر میں یہ فروخت کے لئے پیش کر دی جائے گی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *